اسلامک وظائف

قرض سے نجات کا وظیفہ

قرض سے نجات کا وظیفہ

قرض سے نجات کا وظیفہ

قرض سے نجات کا وظیفہ: جس شخص نے قرض لیا ہو۔  اور اس سے جان نا چھوٹ رہی ہو۔  تو وہ ایک سورۃ صبح اٹھتے ہی تین بار پڑھے۔  جتنا بھی قرض ہو گا انشاءاللہ اتر جائے گا۔ سود والا قرض کبھی بھی نا لیں ۔ اس سے گھر میں برکت نہیں ہوتی۔ مال میں برکت نہیں ہوتی۔ اکثر لوگوں کو شکایت ہوتی ہے کہ ہمارے گھر برکت نہیں ہے اس کی وجہ سود والا قرض ہوتی ہے ان کے گھر اور مال سے برکت چلی جاتی ہے ۔ پھر وہ جتنی بھی بچت کر لیں جتنا بھی مال اکٹھا کرلیں  گھر میں برکت نہیں ہوتی گھر میں لڑائی جھگڑا ہوتا ہے ۔جب بندہ گھر میں سود کا مال لینا دینا شروع کر دیتا ہے تو حرام مال کی وجہ سے برکت نہیں رہتی۔ حدیث بنوی صل اللہ علیہ وآلہ وسلم  ہے۔

جو شخص سود لیتا ہے اس کی مثال ایسی ہی ہے جیسے وہ اپنی ماں سے بدفعلی کرتا ہے۔

قرض سے نجات کے وظیفے کا عمل

اس سے پتا چلتا ہےتو یہ سود کس قدر بری چیز ہے۔ یہ عمل نماز فجر کے بعد کرنا ہے۔ نماز فجر کے بعد باوضو حالت میں آپ نے اول و آخر گیارہ گیارہ مرتبہ درود پاک پڑھنا ہے اور درمیان میں تین بار سورۃ التکاثر پڑھنی ہے جو کہ تیسویں پارے میں ہے انشاءاللہ یہ کرنے سے آپ کا سارا قرض اتر جائے گا ۔ آپ کے سارے قرض ادا ہو جائیں گے۔ اس قرض کے ادا ہونے کے ایسے اسباب پیدا ہو جائیں گے کہ آپ سوچ بھی نہیں سکتے۔ تو اللہ پاک کی ذات پر بھروسہ رکھتے ہوئے یہ عمل کریں۔

زما کی کوشش

ہماری پوری کوشش ہوتی ہے کہ ہم آپ کو زیادہ سے زیادہ وظیفے بتا کر آپ کی مشکلات کو دور کر سکے۔ اور آپ کی مدد کر سکے ہمارے تمام وظیفے تصدیق شدہ کتابوں سے اکھٹے کئے گئے ہیں اگر اس میں کوئی کمی بیشی یا کوتاہی ہو جائے تو اللہ اسے معاف فرما دیں۔ ہمارے وظیفوں کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک شئیر کریں کیونکہ یہ صدقہ جاریہ ہے۔ اس کو شئیر کر کے اپنے بھائی اور بہنوں کو بھی فائدہ دیں۔

Leave a Comment