اسلامک واقعات

بوڑھی عورت کی اللہ سے رو رو کر فریاد

ایک عورت تھی جوکہ ایک جھونپڑی میں رہتی تھی-ایک دن اس کو کسی کام سے گھر سے دور جانا پڑا-جب وہ عورت واپس آئی تو اس نے دیکھا اس کا چھونپڑا گرا پڑا تھا-اس بیچاری کے پاس اور کوئی جگہ بھی نا تھی رہنے کے لیے تو وہ سخت اداس ہوئی اور لوگوں سے دریافت کرنے لگی کہ اس کے جھونپڑے کو کس نے گرایا-

پھر اس کو لوگوں سے معلوم ہوا کہ اس کی جھونپڑی بادشاہ کہ حکم سے گرائی گئی ہے-بادشاہ نے کہا تھا میرے محل کے سامنے یہ جھونپڑی اچھی نہیں لگتی اس لیے اسے گرا دو-عورت نے سر اٹھا کر آسمان کو دیکھا اور بولی ” میرے مولا میں نہیں تھی لیکن تو ، تو موجود تھا” بس اس عورت کا اتنا ہی کہنا تھا کہ بادشاہ کا سارا محل بادشاہ سمیت زمین میں دھنس گیا-سارا کچھ ایک جھٹکے میں تباہ و برباد ہوگیا-وہ محل اس عورت کے یقین کی وجہ سے گرا تھا-اسے یقین تھا کہ جب وہ گھر سے دور ہوگی تو اللہ اس گھر کی حفاظت کرے گا-لیکن اللہ نے اس عورت کو آزمائش سے گزارا-اور وہ اس آزمائش میں کامیاب ہوئی-اور جب کوئی آزمائش میں کامیاب ہوتا ہے تو اللہ امر کر دیتا ہے-اس عورت کی چھوٹی سی دعا اور کامل یقین نے بادشاہ کا پورا کا پورا محل زمین بوس کر دیا-پھر ہمارا یقین اتنا کمزور کیوں ہے-آپ سوچیں کہ اگر ہم اس پر کامل یقین رکھیں تو وہ کتنی بلندی تک پہنچا سکتا ہے-کس کی بلندی؟ ضروری نہیں بلندی کا مطلب دنیاوی کامیابی ہے بلکہ بلندی کا مطلب ہوتا ہے کہ ایمان میں بلندی-اور کامل یقین کے ذریعے جو بلندی ملتی ہے

اس میں غرور تکبر نہیں ہوتا-کیونکہ ہمیں یقین ہوتا ہے کہ سب کچھ اللہ کا عطا کردہ ہے-اسی یقین کی وجہ سے ابو مالک رضی اللہ عنہہ کی جان اللہ تعالی نے اپنا فرشتہ بھیج کر بچائی تھی-اسی یقین کی وجہ سے حضرت اسمائیل علیہ اسلام چھری کے نیچے سے زندہ بچ گئے تھے- اسی یقین کی وجہ سے ذوالقرنین نے یاجوج ماجوج کے خلاف ایک مضبوط دیوار کھڑی کی تھی-اسی یقین کی وجہ سے حضرت یعقوب علیہ السلام حضرت یوسف علیہ السلام سے دوبارہ ملے تھے حالانکہ وہ ان کی یاد میں نابینا ہو گئے تھے-پھر ہمارا یقین کمزور کیوں ہے؟نماز میں اللہ سے کامل یقین کی دعا منگیں اور اس سے ہدایت طلب کریں-کیونکہ ایسا کبھی نہیں ہوتا کہ اس سے ہدایت طلب کرو اور وہ نا دے-

Leave a Comment