اسلامک معلومات اسلامک واقعات اسلامک وظائف

اللہ کے نام “المعز” اور “المذل” کے تفصیلی مطلب

المعز کا مطلب ہوتا ہے “عزت دینے والا” -اگر ہم معاشرے میں اچھا اٹھ بیٹھ رہے ہیں، اچھا کھا پی رہے ہیں اور اچھا پہن رہے ہیں تو اس میں ہمارا کوئی کمال نہیں ہے-یہ سب چیزیں ہمیں اللہ تعالی کی عطا کردہ ہیں-ہم ہر ایک ایک چیز کے لیے اس کے محتاج ہیں-اگر اس کا ہاتھ ہم پر سے اٹھ جائے تو ہم کسی کو منہ دکھانے کے قابل بھی نا رہیں-عزت ایک ایسی چیز ہے جو ہمارا معاشرے میں بھرم بنائے رکھتی ہے-عزت نا تو لوگ گالم گلوچ کرتے ہیں، الٹا سیدھا بکتے ہیں- اگر آپ معاشرے میں فخر سے سر اٹھا کر چل رہے ہیں تو اس میں صرف اور صرف اللہ کا کمال ہے-ہمیں جو عزت اس نے عطا کی ہے اس کا غلط استعمال ہر گز نہیں کرنا-

المذل کا مطلب ہوتا ہے “ذلت دینے والا”-جب ہمیں عزت راس نہیں آتی اور ہم اپنی عزت کا غلط فائدہ اٹھاتے ہیں تو پھر جو عزت عطا کرتا ہے وہ ذلیل بھی کر کے رکھ دیتا ہے-ظالم انسان کبھی بھی اللہ کی پکڑ سے بھاگ نہیں سکتا-اللہ تعالی ان کو ذلت دیتے ہیں جو اس کے حق دار ہوتے ہیں-ہماری تاریخ بھری پڑی ہے کہ کس طرح اللہ تعالی ظالم کو ذلیل کر کے رکھ دیتا ہے-

اسی لیے ہمیں اپنی عزت کی حفاظت کرنی چاہیے-اپنے ضمیر کو دفن نہیں کرنا-ضمیر کی آواز ہمیشہ عزت قائم رکھنے کی تلقین کرتی ہے-ہم دوسروں کو عزت دیں گےتو وہ خالق و مالک کیسے ہمیں عزت نہیں دے گا-عزت صرف لوگوں کی ہی نہیں کی جاتی بلکہ جانوروں کی اور یہاں تک کہ چیزوں کی بھی عزت کی جاتی ہے-وہ ہمیں عزت عطا ہی اسی لیے کرتا ہے کیونکہ ہم دوسروں کی عزت کرنا جانتے ہوتے ہیں ورنہ ذلیل کرنے میں تو اس کو ایک سیکنڈ بھی نہیں لگے گا-

Leave a Comment